Tuesday , October 20 2020

حکومت جان بوجھ کر کرونا وائرس سے ہونے والی ہلاکتیں اور متاثرین کی تعداد چھپا رہی ہے، ینگ ڈاکٹرز کا الزام

اعتماد نیوز

جنرل ہسپتال میں100 سے زائد کا کورونا ٹیسٹ مثبت آنا خطرناک ہے، حکومت کا شاپنگ مالز کھولنے کا فیصلہ انتہائی غلط تھا‘صدر وائے ڈی اے

لاہور: ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن (وائی ڈی اے)نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ حکومت کورونا وائرس سے اموات کی اصل تعداد نہیں بتا رہی اور وزیر صحت عوام کو کورونا وائرس کے متاثرین کے حوالے سے سچ بتائیں۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن کے صدر ڈاکٹر عمار یوسف نے کہا کہ 90 سے زائد ڈاکٹر اور 10 سے زیادہ نرسیں کورونا وائرس سے متاثر ہوئیں ہیں۔

انہوں نے کہا کہ جنرل ہسپتال میں100 سے زائد کا کورونا ٹیسٹ مثبت آنا خطرناک ہے، ڈاکٹر ثنا فاطمہ ڈاکٹرز ہسپتال میں کورونا کے باعث جاں بحق ہوگئیں۔

ڈاکٹر عمار یوسف کا کہنا تھا کہ حکومت کا شاپنگ مالز کھولنے کا فیصلہ انتہائی غلط تھا، ہماری تنظیم کے متعدد عہدیداران بھی اس موذی وبا سے متاثر ہوئے۔

ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن کے عہدیدار ڈاکٹر ارسلان بٹ کا کہنا تھا کہ پنجاب میں مریضوں کی تعداد بڑھتی جارہی ہے مگر پلازمہ تھراپی پر پنجاب حکومت نے کام نہیں کیا۔

انہوں نے کہا کہ وائی ڈی اے جنرل ہسپتال اب اپنے طور پر ایک پورٹل بنا رہی ہے اور اس پورٹل میں کورونا پازیٹو ہو کر صحت مند ہونے والے افراد کے نمبر محفوظ ہوں گے۔

ڈاکٹر ارسلان بٹ نے کورونا وائرس کا شکار ہوکرصحت مند ہونے والے افراد سے گزارش کی کہ پلازما عطیہ کریں۔


About

Leave Comment

Skip to toolbar