Sunday , January 17 2021

بارش کے موسم میں مخصوص جسم کے حصوں پر اینفکشن سے بچنے کے طریقے جانیئے

اعتماد سپیشل
بارش کے موسم میں ہر طرف نمی کی وجہ سے جراثیم جلدی پھیلتے ہیں جس کی وجہ اسے انفیکشن کا امکان بڑھ جاتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ اس موسم میں ہھوڑے، پھنسی، داد، کھاج، کی پریشانی زیادہ سامنے آتی ہے۔ اس موسم میں پرائیویٹ پارٹ میں بھی انفیکشن ہونے کا ڈر رہتا ہے۔ اسے ویجائنل انفیکشن کہا جاتا ہے۔ اس ایریا میں خواتین میں اکثر جلن اور لال ریشز ہونے کی پریشانی سامنے آتی ہے۔ اگر آپ اس موسم میں ہونے والی پریشانیوں سے بچنا چاہتے ہیں تو پرائیوٹ پارٹ کی صاف صفائی رکھنے میں بالکل کوتاہی نہ کریں۔ اگر آپ چاہتے ہیں کہ آپ کو اس موسم میں کوئی انفیکشن نہ ہو تو دیں ان باتوں پر خاص دھیان۔
بارش کے موسم میں پارٹنر کے ساتھ ان خاص لمحوں میں مرد ساتھی کو کنڈوم پہننا چاہئے تاکہ ایس ٹی ڈی (سیکشوئل ٹرانسمٹیڈ ڈسیز) کے ساتھ حمل میں ہونے والی دقتوں سے بچا جا سکے۔ پرائیویٹ پارٹ کو انفیکشن سے بچانے کا سب سے اچھا طریقہ ہے۔ اس سے وجائنا کا پی ایچ لیول بھی متوازن رہتا ہے۔
کئی مرتبہ بارش میں بھیگ جانے پر لوگ اپنے کپڑے تو بدل لیتے ہیں لیکن انڈر گارمینٹس نہیں بدلتے۔ آپ کی اس عادت کی جہ سے آپ کو پرائیوٹ پارٹ میں انفیکشن ہونے کا امکان بنا رہتا ہے۔ کوشش کریں کہ پرائیویٹ پارٹ ہمیشہ سوکھا ہی رہے نہیں تو وہاں پر جراثیم کے پھیلنے کا امکان کافی بڑھ جائے گا۔
بارش کے موسم میں کاٹن کے ڈھلیلے ڈھالے کپڑے پہننے چاہئے تاکہ پرائیویٹ پارٹ ہیلدی رہے۔ بہت زیادہ ٹائٹ کپڑے انٹیمیٹ ہائی جین کیلئے اچھے نہیں مانے جاتے ہیں۔ پرائیویٹ پارٹ تک ہوا جاتی رہے اس کیلئے ڈھیلے کپڑے پہننے کی صلاح دی جاتی ہے


About

Leave Comment

Skip to toolbar